ویڈیو: مٹی کے خوفناک دریا نے سونے کی کان میں 9 کان کنوں کو دفن کر دیا

1 min read

Sharing is caring!


انقرہ: ترکیہ میں لینڈ سلائیڈنگ کی وجہ سے مٹی کے خوفناک دریا نے سونے کی کان میں 9 کان کنوں کو دفن کر دیا۔

غیر ملکی میڈیا رپورٹس کے مطابق مشرقی ترکیہ میں لینڈ سلائیڈنگ سے 9 کان کن لاپتا ہو گئے ہیں، مٹی کے ایک خوف ناک دریا نے صوبہ ارزنجان میں سونے کی کان ڈھانپ دی، واقعے کی ایک ویڈیو بھی سامنے آئی ہے جس میں خوف ناک انداز میں مٹی کا دریا بہتا نظر آتا ہے۔

لاپتا افراد کی تلاش کے لیے سرچ اینڈ ریسکیو آپریشن جاری ہے، وزارت توانائی کے حکام نے واقعے کی تحقیقات شروع کر دی ہیں، یہ واضح نہیں ہوا ہے کہ آیا لاپتا ہونے والے زیر زمین کام کرنے والے کان کن تھے، یا وہ لینڈ سلائیڈنگ سے متاثرہ علاقے کی سطح پر کام کر رہے تھے، کیوں کہا جا رہا ہے کہ اگر وہ زیر زمین کام کر رہے تھے تو پھر ان کے بچنے کے امکانات معدوم ہیں۔

لینڈ سلائیڈنگ گزشتہ روز دوپہر ڈھائی بجے کے قریب ہوئی، یہ واقعہ ترکی کے پہاڑی صوبہ ارزنجان میں واقع ’کوپلر کان‘ میں پیش آیا، ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ مٹی راستے میں آنے والی ہر چیز کو لپیٹ میں لے رہی ہے۔ وزیر داخلہ علی یرلیکایا نے کارکنوں کے لاپتا ہونے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ 400 سرچ اینڈ ریسکیو اہلکاروں پر مبنی ٹیمیں تلاش اور بچاؤ کی کوششیں کر رہی ہیں۔

اسے ایک بڑا لینڈ سلائیڈ مانا جا رہا ہے، کوپلر مائن کے حصص کی آدھی قیمت لینڈ سلائیڈنگ کے بعد گر گئی ہے، حکام کا کہنا ہے کہ لینڈ سلائیڈنگ کے محرک کا کوئی پتا نہیں چلا ہے۔ ماہرین نے یہ تشویش بھی ظاہر کی ہے کہ کان کا فضلہ سائینائیڈ سے آلودہ ہے، جس کے اب نکاسی آب کے نظام میں جانے کا امکان ہے، جو ایک ممکنہ ماحولیاتی آفت ہے۔

Comments





Source link

Oval@3x 2

Don’t miss latest news!

Select list(s):

We don’t spam! Read our [link]privacy policy[/link] for more info.

🕶 Relax!

Put your feet up and let us do the hard work for you. Sign up to receive our latest news directly in your inbox.

Select Your Choice:

We’ll never send you spam or share your email address.
Find out more in our Privacy Policy.

🕶 Relax!

Put your feet up and let us do the hard work for you. Sign up to receive our latest news directly in your inbox.

Select Your Choice:

We’ll never send you spam or share your email address.
Find out more in our Privacy Policy.

Sharing is caring!

Read More :-  کراچی میں اسٹریٹ کرائمز کے باوجود وزیر داخلہ سندھ پولیس کی کارکردگی سے مطمئن

You May Also Like

More From Author